سندھ میں تیل اور گیس کے مزید نئے ذخائر دریافت

سندھ میں تیل اور گیس کے مزید نئے ذخائر دیکھیں
(فوٹو: فائل)

اسلام آباد: سندھ میں تیل اور گیس کے مزید نئے ذخائر دریافت کرلیے گئے۔

ماڑی پیٹرولیم کمپنی لمیٹڈ (MPCL) نے حال ہی میں پاکستان کے صوبہ سندھ میں تیل اور گیس کے نئے ذخائر کی دریافت کا اعلان کیا ہے، جو کہ ملکی انرجی سیکٹر کے لیے ایک اہم پیشرفت ہے۔

اس نئی دریافت کو “شوال-1” کے نام سے موسوم کیا گیا ہے، جس کی تفصیلات کے مطابق، ابتدائی طور پر اس مقام سے روزانہ 25 ملین مکعب فٹ گیس اور 1040 بیرل خام تیل کی پیداوار کی توقع ہے۔

کھودائی کا کام 27 جنوری 2024 کو شروع ہوا تھا اور 1,136 میٹر کی گہرائی تک پہنچ گیا ہے، جو کہ ماڑی فیلڈ کے کنز شوال-1 کے اہم ذخائر تک رسائی کے لئے کافی ہے۔ MPCL کے ڈائریکٹر، فہیم حیدر نے اس نئی دریافت کو کمپنی اور ملک کے لیے “قابل ذکر” قرار دیا ہے۔

یہ دریافت MPCL کے لیے خاص طور پر اہم ہے کیونکہ کمپنی نے حالیہ مہینوں میں مختلف مقامات پر گیس کی نئی دریافتوں کا سلسلہ جاری رکھا ہوا ہے، جن میں سجاول میں 1.24 ملین اسٹینڈر کیوبک میٹر گیس اور بلوچستان کے ضلع کوہلو میں نئے ذخائر شامل ہیں۔

اس کے علاوہ، فروری میں ضلع خیرپور میں 14.3 ملین اسٹینڈرڈ کیوبک فٹ گیس یومیہ حاصل کرنے کی دریافت بھی کی گئی تھی۔

یہ دریافتیں نہ صرف MPCL کی پیداواری صلاحیت کو بڑھاتی ہیں بلکہ پاکستان کی انرجی ضروریات کو پورا کرنے میں مدد دیتی ہیں، جو کہ ملکی معیشت کے لیے بھی مثبت اشارہ ہے۔